انتظامیہ مولاناعبدالعزیزسے لال مسجد کا قبضہ چھڑانے میں ناکام، اگلا اقدام کیاہوگا تفصیلات سامنے آگئیں

0
27
Maulana Abdul Aziz occupied the Lal masjid again - Urdu

اسلام آباد: وفاقی دارلحکومت کی لال مسجدپرمولاناعبدالعزیزایک بارپھرقابض ہیں، اورانتظامیہ کیجانب سے قبضہ چھڑانے کی تمام کوششیں ناکام ہوگئی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق، حکومت نے مولانا عبدالعزیز کے ساتھ مزاکرات کیلئے نامورعلماء کرام سے مددمانگ لی ہے، اس ضمن میں گزشتہ روزپاکستان علماء کونسل کے چیئرمین حافظ طاہر اشرفی نے بھی لال مسجد میں مولانا سے ملاقات کی اورمسئلے کو بات چیت سے حل کرنے اور ثالثی کا کردار اداکرنے کی خواہش کا اظہار کیا تاہم وہ بھی کامیابی حاصل کرنے میں ناکام رہے۔ انکا کہنا تھا کہ امید ہے کل تک معاملات حل ہوجائیں گے۔

مولانا طاہراشرفی نے وفاقی وزیرداخلہ اعجاز شاہ سے ملاقات کے بعدمولانا عبدالعزیزکے مطالبات کے حوالے سے حکومتی قانونی نکات پرانکے ساتھ بات چیت کی لیکن مولاناعبدالعزیزنےان نکات کو یکسرمسترد کردیا ہے۔ طاہراشرفی نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ مسجد کا محاصرہ ختم کیا جائے اوراس بات کویقینی بنایا جائے کہ وہاں کوئی گولی نا چلے جس سےماحول مزیدخراب ہو۔

مزید پڑھیں: پاکستان نےکروزمیزائل کا کامیاب تجربہ کرلیا۔

انہوں نے کہا کہ مسجد میں موجود لوگوں کی تعداد بہت کم ہےاور مولانا عبدالعزیز کے پاس کسی قسم کا غیرقانونی اسلحہ موجود نہیں، انکے ساتھ صرف 4 گارڈز ہیں جن کے پاس قانونی اسلحہ موجود ہے۔ دوسری جانب شھدا فائونڈیشن کے ترجمان حافظ احتشام کی مدعیت میں مولانا عبدالعزیزاورانکی اہلیہ کے خلاف ضلعی انتظامیہ اور پولیس کو دھمکیاں دینے پرتھانہ آبپارہ میں مقدمہ درج کرلیاگیا ہے۔

واضح رہے مولانا عبدالعزیز نے ایک بار پھر لال مسجد پر قبضہ کرلیا ہے جبکہ انتظامیہ نے مسجد کا قبضہ چھڑانے کیلئے محاصرہ کررکھا ہے اور مزاکرات کی کوشش بھی جاری ہے۔ یہ صورتحال اس وقت پیدا ہوئی جب اسلام آباد کی انتظامیہ نے امام مسجد کے عہدے کا نوٹفیکیشن جاری کرنے میں تاخیر کی۔ یادرہے، حکومت جامعہ حفصہ کو 20 کنال اراضی فراہم کرنے پر رضا مندی ظاہر کی تھی ۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.